Beauty Advise

موسم سرمامیں ہونٹوں کو لپ آئل سے سنواریں

Source: http://www.urdupoint.com/women/article/beauty/mausam-sarma-main-honton-ko-lip-oil-se-sanwarain-1538.html

جو جوبا‘ ارجن ‘ ناریل ‘ ریتون ‘ پودینہ اور بادام کا تیل ہونٹوں پر استعمال کرکے انہیں نرم وملائم بنایا جاسکتا ہے‘ جادوئی شگفتگی سے بھرپور انداز سنگھار ہے
شنگرفی ‘ نرم وملائم ‘ دلکش ہونٹ سردیوں میں پھٹ کر نہ صرف آپ کے چہرے کو متاثر کرتے ہیں بلکہ تکلیف دہ بھی ہوجاتے ہیں۔ خواتین ہونٹوں پرلپ اسٹک کے بعد لپ بام لگانا یالپ اسٹک کے بغیر صرف چپ اسٹک استعمال کرنا بہت پسند کرتی ہیں لیکن بے حد پھٹے ہوئے ہونٹوں پر لپ بام ‘ لپ گلویا چیپ اسٹک اثر نہیں دکھاتی ‘ ایسے میں صرف مختلف تیل ہی ہونٹوں پر جادوئی شگفتگی لاسکتے ہیں۔ 2016 میں پوری دنیا میں فیشن اور بیوٹی کے حوالے سے لپ آئل کااستعمال زوروں پررہا ۔ یہ تیل لپ بام کی طرح نرم اور لپ گلوس کی طرح چمکدار ہوتے ہیں ۔
جسم کے مقابلے میں ہمارے ہونٹ آئل گلینڈز سے محروم ہوتے ہیں اور بہت جلد پھٹ جاتے ہیں ۔ ہونٹوں کے لیے لپ بام ایک اچھا انتخاب ہے لیکن اب لپ آئل بھی آپ کو نہایت اچھا نتیجہ فراہم کرتے ہیں اور لگانے میں بھی نہایت آسان ہیں اور انہیں لگانا اتنا مشکل بھی نہیں ہوتا جتنا سمجھا جارہا ہے ۔ لپ آئل کے طور پر جو جوبا‘ ارجن ‘ ناریل ‘ تخم بالنگا‘ زیتون ‘ پودینہ اور بادام کا تیل استعمال کیاجاسکتا ہے ۔ وٹامن Eسے بھرپور یہ خوشبودار تیل آپ کے ہونٹوں کی تازگی لوٹادیں گے ۔
تیل لگانے سے قبل ہونٹوں کی جلد کو صاف کرلیں ۔ اس مقصد کے لیے لیموں کارس اور شکر استعمال کی جاسکتی ہے پھر ٹشوزیا تولیے سے ہونٹ رگڑ لیں ۔ ہونٹوں پر لپ آئل لگالیں ۔ آپ لپ اسٹک کے اُوپر بھی لپ آئل استعمال کرسکتی ہیں ۔ لپ لائن بناکر اس میں لپ آئل لگانا بھی چہرے کا نکھار بڑھا دے گا تاہم کیل مہاسے سے متاثرہ چہرہ یاروغنی جلد پر لپ آئل کے استعمال سے احتراز کریں۔

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s