Beauty Advise

ٹونر بامقابلہ اسٹرنجنٹ Astringent vs. Toner

ٹونر بامقابلہ اسٹرنجنٹ

ٹونر اور اسٹرنجنٹ کے بارے میں بہت سے لوگ کشمش کا شکار نظر آتے ہیں کہ اِن دونوں میں کیا فرق ہے اور اِن کا استعمال کیا ہے۔ آئیے آج ان دونوں کے بارے میں جانتے ہیں ۔

اسٹرنجنٹ اور ٹونر دونوں پانی پر مشتمل کلنزر ہیں جو جلد پر جمع ہونے والی گندگی صاف کرنے میں مدد کرنے کے ساتھ پورزکو کم کرنے میں مدد دیتے ہیں ۔یہ منہ دھونے سے قبل یا جلد کی موسچرائزنگ کے بعد استعمال کیا جاتا ہے۔ ٹونر میں الکوہل کا استعمال نہیں ہوتا، اس لیے ٹونر ہلکا ہوتا ہے اور جلن بھی کم کرتا ہے اس کی اس خوبی کی وجہ سے یہ خشک اور حساس جلد کے لیے بہترین انتخاب ثابت ہوتا ہے۔ چکنی اور ملی ہوئی جلد بھی اس سے فائدہ اُٹھا سکتے ہیں لیکن اسٹرنجنٹ سے ایکنی والی جلدزیادہ فائدہ اٹھا سکتی ہے۔

استعمال

ٹونر اور اسٹرنجنٹ کے لیے تجویز کردہ روٹین “واش، ٹون، موسچرز” دونوں اسٹرنجنٹ اور ٹونر روئی کے گالے سے جلد پر لگائیں، اس کا مطلب یہ ہے کہ آپ کی جلد موسچرازنگ کے لیے تیار ہے۔

391940-472-30

جیسا کہ اسٹریجنٹ میں الکوہل شامل ہوتا ہے، یہ اسکن کو سکیڑتا ہے۔ اس کا روزانہ کا استعمال چکنی جلد کے لیے مفید ہے۔ چکنی جلد کے لیے پیش کردہ تجویز کے مطابق اس کا استعمال دن میں دو مرتبہ صبح اور شام کو کیا جاتا ہے۔ ملی ہوئی جلد کے لیے،اسٹریجنٹ اور ٹونر کا استعمال ایک دن چھوڑ کر کیا جانا چاہیئے یا پھر ایسی جلد والی خواتین اسے جلد کے چکنے حصوں پر استعمال کریں۔  ہماری ایکسپرٹس اسٹریجنٹ عام طور پر ایکنی والی جلد کے لیے تجویز کرتی ہیں۔

450-86536424-woman-pouring-lotion-into-cotton-pad.jpg

 ٹونر جلد کو سُکیڑسکتا ہے اور اس میں سنسناہٹ کا احساس بھی پیدا کر سکتا ہے۔ اس لئے یہ دن میں دو مرتبہ استعمال کرنا چاہیئے۔ ہماری ایکسپرٹس خاص طور پر حساس، خشک اور ملی ہوئی جلد کے لیے  Neutrogena Alcohol-Free Toner ٹونر  کے استعمال کا مشورہ دیتی ہیں۔ یہ الکوحل سے پاک ہونے کی وجہ سے  جلد کی اندر تک نرمی سے صفائی کرکے جلد کو تازگی کا احساس دیتا ہے۔

اگر آپ کی جلد کھردری اور  uneven تو آپ کے لئے Vince Lightening Toner And Pore Tightening بہترین ہے ۔ یہ جلد کا کھردرا پن ختم کرکے اسے نرم وملائم بناتا ہے۔

چکنی جلد کےلئے  Blesso Astringent For Oily Skin اچھا کام کرتا ہے۔اس میں خاص طور پر ایسے اجزاء شامل کئے گئے ہیں جو چکنائی کو ختم کرتے ہیں۔

اثرات

ٹونر اور اسٹریجنٹ دونوں جلد پر موجود گندگی دور کرنے کے ساتھ پورزکو ٹائٹ کرنے کے کام کرتے ہیں اور جلد کو پختہ کرتا ہے۔ یہ جلد پرموجود اضافی تیل دور ہٹاتا ہے۔ ٹونر اکثر جلد پر جلن کا احساس پیدا کرتا ہے لیکن یہ  ساتھ عموماً  تازگی کا احساس دیتا ہے۔ دونوں جلد کو نرم و ملائم کرتے ہیں۔ کچھ ٹونر PH برابر کرنے کے لیے استعمال کیئے جاتے ہیں جو  جلد کو اس کی ساخت واپس لوٹا تے ہیں۔ اسٹریجنٹ ہمیشہ جلد میں کھنچاؤ پیدا کرنے کے ساتھ جلن پیدا کردیتا ہے کیونکہ اس میں تیزابیت موجود ہوتی ہے جبکہ ٹونر میں  تیزابیت کی کمی کے باعث اس کے اثرات کچھ حد تک بہتر ہوتے ہیں۔

اجزاء

اسٹرنجنٹ میں 2% سالی سائکلک اسیڈ ایک فعال جُز ہے۔ پانی ہمیشہ فہرست میں پہلے نمبر پر موجود ہوتا ہے جس کی پیروی ایسو پروپائل الکوہل اور گلسرین کرتے ہیں۔ فارمولا میں قدرتی اسٹرنجنٹ شامل ہوتے ہیں جیسے لیموں کا مرہم، بابونہ، پودینے کا ست، میتھانول یا لونڈر۔

howtogetridofoilyface-useanastringenttoner.jpg

ٹونر  میں بھی پانی سرفہرست اجزاء کے طور استعمال ہوتا ہے کبھی یہ صرف شفافیت کی خوبی بیان کرتا ہے۔ کچھ اپنے اجزاء میں ویچھ ھیزل کے ساتھ خوشبو والے اجزاء بھی شامل کرتے ہیں۔ کچھ الکوہل کا بھی استعمال کرتے ہیں لیکن اس میں شامل اہکوہل اسٹرنجنٹ سے ہلکا ہوتا ہے، ٹونر اپنے اندر موجود نمی پیدا کرنے والے اجزاء رکھتا ہے۔ کچھ میں اسنشیل تیل موجود ہوتا ہے کسی میں وٹامن E، گھی گوار یا کسی اور پودے کا عرق شامل ہوتا ہے۔

Face-spray-post-workout-toner-skin-calmer.jpg

آپ ہم سے آن لائن بہترین پروڈکٹس  ہماری بیوٹی ایکسپرٹس کے مشورے سے خرید سکتے ہیں
http://www.saloni.pk/
آپ فیس بک پیج پہ اپنی جلد اور میک اپ کے حوالے سے کوئی بھی سوال کرسکتے ہیں
https://www.facebook.com/SaloniPK/

 

Categories: Beauty Advise, Skincare

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s