Beauty Advise

فیشل سے قبل احتیاط ضروری ہے

!جی ہاں فیشل سے قبل احتیاط نہایت ضروری ہے
روز مرہ کی بھاگ دوڑ دھول مٹی اور سورج کی شعاعوں سے متاثر جلد کے لیے فیشل نہایت اہم ہے فیشل کی مدد سے نا صرف جلد کی صفائی ہوتی ہے بلکہ اس عمل سے ذہنی اور جسمانی سکون بھی ملتا ہے اور تھکاوٹ سے نجات مل جاتی ہے ماہرین کے مطابق خواتین کو مہینے میں ایک سے دو مرتبہ فیشل کا استعمال لازمی کرنا چاہیئے لیکن آکثر اوقات فیشل سے وقتی طور پر لال دھبے اور مہاسے نکل آتے ہیں اور ہم پارلر والی سے شکایت کرتے ہیں کہ اُس نے فیشل ٹھیک نہیں کیا جب کہ اِن لال دھبوں کی بےشمار وجوہات ہوسکتی ہیں اکثر اوقا ت آپ بے دہانی میں فیشل سے قبل اپنے چہرے پر کوئی ایسی چیز لگا لیتی ہیں جو ری ایکشن کا سبب بنتی ہے اور آپ کو فیشل کا من چاہا نتیجہ نہیں ملتا۔ فیشل کے بہترین نتائج حاصل کرنے کے لیے ضروری ہے ان سات باتوں کا خیال رکھا جائے ان باتوں کا خیال رکھتے ہوئے آپ فیشل کے بہترین نتائج حاصل کرسکتی ہیں۔

Best-Facial-Treatment-in-Toronto

فیشل سے قبل ویکس سے گریز کریں
ویکس ایک ایسا عمل ہے جو غیر ضروری بال نکالتے ہوئے جلد کی سطح کو بری طرح نقصان پہنچتا ہے اس کھنچی ہوئی جلد پر اگر فوراً فیشل کردیا جائے تو نقصان اُٹھانا پڑ سکتا ہے۔ اس صورتحال کے پیش نظر ویکس کم سے کم فیشل سے چوبیس گھنٹے پہلے کروانا بہتر ہے۔

ddd-fsace

دھوپ سے دور رہیں
سورج کی شعائیں چہرے پر مضر اثرات مرتب کرتی ہیں سخت دھوپ میں رہنے کہ فورا بعد فیشل کروانا جلد کے لیے نقصان دہ ہے کیونکہ فیشل کی کریموں میں موجود اینٹی ایکنی اور اینٹی ایجنگ اجزاء ایسی جلد پر ریکشن کرسکتی ہیں۔ یہ بات بالکل درست ہے کہ سورج کی شعاوں سے متاثرہ جلد کا علاج فیشل ہے لیکن فوری طور پر فیشل کروانا درست نہیں۔

AAEAAQAAAAAAAAYRAAAAJDRlNzgyNDE1LThkNWEtNDZhNi05OTRmLTc4MmRmMmFhZmJhMA

بوٹوکس کے بعد احتیاط کریں
چھائیاں اور جھریاں چہرے کو بدنماں بناتی ہیں لیکن ماہرین نے اس کا اعلاج بھی نکال لیا ہے۔ بوٹوکس نام کی یہ ٹیکنولوجی ابھی پاکستان میں تو اتنی عام نہیں ہوئی لیکن پھر بھی ایک بہت بڑا طبقہ چہرے پر سے چھریاں اور چھائیاں ہٹانے کے لیے بوٹوکس کا استعمال کررہا ہے۔ اس عمل کے فوراً بعد بھی فیشل نقصان دہ ثابت ہوتا ہے کیونکہ اس عمل کے دوران چہرے پر انجکشن کا استعمال ہوتا ہے اور فیشل کے دوران کیے جانے والے مساج سے انجکٹڈ سیال اپنا روخ غلط جانب بھی موڑ سکتا ہے جس سے جلد میں ریکشن ہونے کا خطرہ پیدا ہوجاتا ہے۔

فیشل سے قبل جلد پر کوئی ٹوٹکا استعمال نہ کریں
اکثر اوقات جلد کو حسین بنانے یا داغ دھبے دور کرنے کے لیے خواتین گھریلو ٹوٹکوں کا استعمال کرتی ہیں ان ٹوٹکوں سے عموماً کوئی نقصان نہیں ہوتا زیادہ تر ان کا فائدہ ہی ہوتا ہے لیکن فیشل سے قبل اس طرح کے ٹوٹکے استعمال کرنا درست نہیں ان کے استعمال سے چہرے پر موجود مسام بھر جاتے ہیں اور جو کریم کو مکمل طور پر جلد میں داخل نہیں ہونے دیتے اور اس طرح فیشل کے خاطر خواہ نتائج نہیں مل پاتے۔

Home-Remedies-For-Face.jpg

مصنوئی پلکیں استعمال نہ کریں
مصنوعی پلکوں کے لگانے کے لیے جس کریم یا گلو کا استعمال کیا جاتا ہے وہ فیشل کے دوران اگر لگا رہ جائے تو نہایت مضر اثرات مرتب کرتا ہے پلکیں اُتارنے کے بعد بھی کریم یا گلو لگا رہ جاتا ہے اور اُسے اڑتالیس گھنٹوں تک رگڑا نہیں جا سکتا نا ہی اسٹیم میں رکھا جاسکتا ہے اس لیے ضروری ہے کے فیشل سے دو دن قبل ہی مصنوعی پلکوں کا استمعال ترک کر دیں۔
گلائیکولک ایسڈ اور ریٹی نول والے اجزا کی کریم کا استمعال نہ کریں
تیز کیمکل والی کریمیں جن میں گلائیکولک ایسڈ اور ریٹی نول کے اجزا شامل ہوں، فیشل سے قبل استعمال نہیں کرنے چاہیئے۔ فیشل کے بعد زیادہ تر ریکشن ایسی وجہ سے ہوتا ہے کیونکہ خواتین کو پتا ہی نہیں ہوتا اور وہ ایسی کریموں کو چہرے پر لگا کر فیشل کروا لیتی ہیں۔

141477281

چہرے پر زخم ہوں تو فیشل لینے سے گریز کریں
چہرے پر اگر زخم ہوں تو فیشل لینے سے گریز کریں کیونکہ فیشل میں موجود کریمیں آپ کے زخم کو مزید خراب کرسکتی ہیں۔

IS693060

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s