ڈپریشن​ خوبصورتی کا دشمن

maxresdefault

ڈپریشن​ خوبصورتی کا دشمن
ذہنی دباؤ یا ڈپریشن آپ کی خوبصورتی کا دشمن ہے کیونکہ مسلسل پریشان اور ذہنی دباؤ کا شکار رہنے کی وجہ سے چہرے پر بہت جلد چھائیاں اور جھریاں نمودار ہونا شروع ہو جاتی ہیں اور انسان وقت سے پہلے بوڑھا دکھائی دینے لگتا ہے۔ ذہنی دباؤ کی صورت میں طبیعت میں مسلسل بے چینی کی کیفیت رہتی ہے اور انسان پُرسکون نیند سے بھی محروم رہتا ہے۔ نیند پوری نہ ہونے کی صورت میں آنکھوں کے گرد حلقے پڑنے، چکر آنے، دل گھبرانے اور بھوک کی کمی کی شکایت رہتی ہے۔ اس قسم کے مسائل کی وجہ سے نہ صرف جسم متاثر ہوتا ہے بلکہ چہرے کی خوبصورتی بالکل ختم ہو کر رہ جاتی ہے۔ اگر گھر کا ماحول پُرسکون نہ ہو تو انسان بہت جلد ذہنی دباؤ کا مریض دکھائی دینے لگتا ہے۔ مسلسل ذہنی دباؤ کی کیفیت خطرناک ذہنی امراض کی شکل اختیار کر لیتی ہے۔
اگرچہ ذہنی دباؤ یا ڈپریشن ایک ہی نفیساتی بیماری ہے جس کے پیدا ہونے میں انسان کا اپنا عمل دخل زیادہ ہوتا ہے۔ ماہرین نفسیات کے مطابق ذہنی دباؤ لاعلاج مرض نہیں بلکہ اس بیماری کو نہ صرف کافی حد تک کم کیا جا سکتا ہے بلکہ اس سے پوری طرح چھٹکارہ بھی حاصل کیا جا سکتا ہے۔
ذہنی دباؤ سے بچنے کا سب سے اہم طریقہ تو یہ ہے کہ آپ ہمیشہ ہر مسئلے پر مثبت انداز میں سوچیں۔ ظاہر ہے کہ جب آپ مثبت سوچ کو اپنے ذہن میں جگہ دیں گے اور منفی سوچ سے گریز کریں گے تو کبھی بھی مایوسی کا شکار نہیں ہوں گے۔ اس طرح آپ ٹینشن سے دُور رہیں گے۔
اگر آپ بجائے احاس کمتری میں مبتلا ہونے کے اپنے اندر یہ احساس پیدا کریں کہ آپ ہر لحاظ سے مکمل انسان ہے۔ تو اس احاس کے ساتھ آپ کے اعتماد میں اضافہ ہو جائے گا اور آپ ذہنی دباؤ سے بچنے میں کامیاب ہو جائیں گے۔ ذہنی دباؤ سے بچنے کے لیے گھر کے ماحول کا پُرسکون ہونا بہت ضروری ہے۔ اس لیے اس بات کا خاص خیال رکھا جائے کہ گھر کا ماحول پُرسکون رہے۔

images (1)