رمضان میں جلد کو پُر نم رکھنے کے 2 بہترین طریقے

بہت سے لوگ رمضان کے مہینے میں خشک جلد کی زیادتی کی شکایت کرتے ہیں۔ اِس کی بڑی وجہ یہ ہے کہ اِس با برکت مہینے میں ہم پانی کا استعمال زیادہ نہیں کر پاتے جس سے جلد اندرونی اور بیرونی طور پر خشکی کا شکار ہو جاتی ہے۔ انہی شکایت کو مد نظر رکھتے ہوئے آج ہَم اپنے ریڈرز کے لئے چند بہترین طریقے بیان کر رہے ہیں جو اُنہیں جلد کی خشکی سے پیدا ہونے والے مسائل سے بچانے میں مدد کریں گے۔

پانی کا زیادہ استعمال
بہت سے لوگوں کو اِس بات کا ادراک تو ہے کہ ہمیں پانی زیادہ پینا چاہیے اور رمضان کے مہینے میں تو خاص طور پر زیادہ پانی پینا آپ کو تندرست اور توانا رہنے میں مدد کرتا ہے۔ لیکن باوجود اِس ادراک کے ہم پِھر بھی اِس بات کا خیال نہیں رکھتے اور پانی کی کمی کا شکار ہو جاتے ہیں۔

خاص طور پر رمضان میں ہمیں چاہیے کے پانی پینے کا ایک مخصوص معمول بنایا جائے۔ اِس معمول کے تحت ہمیں سحری میں وقفے سے 5 سے 6 گلاس پانی پینا چاہیے۔ اور اسی طرح افطار کے وقت بھی وقفے وقفے سے 5 سے 6 گلاس پانی پینا چاہیے۔ اِس معمول سے نا صرف ہم پانی کی کمی کا شکار نہیں ہوں گے بلکہ ہماری جلد بھی تروتازہ اور پُر نم رہے گی۔

عرق گلاب کا استعمال
عرق گلاب کا استعمال بھی آپ کی جلد کو پُر نم رکھنے میں بے حد مدد کرتا ہے۔ رمضان کے مہینے میں دوپہر کے وقت عرق گلاب جلد پر استعمال کرنے سے جلد نرم ملائم اور تروتازہ رہتی ہے۔ اِس کی خوشبو سے گرمیوں میں پسینے کی بدبو سے بھی نجات حاصل کی جا سکتی ہے۔